باڑہ پریس کلب کے سابق صدر خادم آفریدی کے اٹھائے جانے کے خلاف باب خیبر کے سامنے احتجاجی مظاہرہ

باڑہ پریس کلب کے سابق صدر خادم آفریدی کے اٹھائے جانے کے خلاف باب خیبر کے سامنے احتجاجی مظاہرہ

تفصیلات کے مطابق خیبر یونین آف سیٹیزن جرنلسٹ کی جانب سے باڑہ پریس کلب کے صحافی خادم آفریدی کی گرفتاری کے خلاف احتجاجی مظاہرہ ہوا ۔ مقررین نے خادم آفریدی کی گرفتاری کی شدید الفاظ میں مذمت کی اور حکومت سے مطالبہ کیا کہ اس گرفتاری پر انکوائری کمیشن قائم کرکے حقیقت عوام کے سامنے لایا جائے ۔

انہوں نے کہا کہ صحافیوں کے ساتھ اس متعصبانہ اور غاصبانہ رویے کی وجہ سے پاکستان صحافت کی انڈیکس میں 145 ویں نمبر پہ چلا گیا ہے ۔ ایسی بیہودہ الزامات اور گرفتاریوں سے بین الاقوام میں پاکستان کی بدنامی ہورہی ہے ۔ انہوں نے حکومت سے صحافی خادم کی رہائی کا مطالبہ کیا اور باڑہ پریس کلب کے ساتھ ہر قسم کے تعاون کا اعلان کی

دوسری جانب

پشاور پریس کلب میں ضلع خیبر کے تینوں پریس کلبوں اور پشاور پریس کلب صحافیوں کا مشترکہ احتجاجی مظاہرہ
صحافیوں نے مطالبہ کیا کہ باڑہ پریس کلب کے سابقہ صدر خادم خان آفریدی کو فوری طور پر رہا کیا جائے۔جن اداروں نے خادم خان کو غیر قانونی طور پر اٹھاکر گرفتار کیا ہے انکے خلاف آزاد عدالتی کمیشن بناکر واقع کی شفاف تحقیقات کی جائے کیونکہ ایک صحافی کو کیسے ملکی ادارے بغیر کسی وجہ کے گرفتار کرسکتی ہے۔صحافیوں نے کہاکہ اگر ہمارے مطالبات نہیں مانے گئے تو نہ صرف خیبر پختونخوا بلکہ ملکی سطح پر صحافتی تنظیموں کے ساتھ ملکر ملک گیر احتجاج پر مجبور ہوجائے گے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.